خواتین میں وٹامن ڈی کی کمی کی علامات کیا ہیں؟

خواتین میں وٹامن ڈی کی کمی کی علامات کیا ہیں؟

وٹامن ڈی انسانی جسم کے لیے بے حد مفید ہے۔ یہ کئی امراض سے بچاتا ہے اور ایک تحقیق کے مطابق وٹامن ڈی میں کمی یا نقص کی وجہ سے جسم کو کئی مہلک امراض لاحق ہوسکتے ہیں۔ ڈاکٹرز اورماہرین صحت جسم میں وٹامن ڈی کی مقدار پوری رکھنے کی تاکید کرتے ہیں، خصوصاً اگر کوئی کورونا وائرس کا شکار ہوجائے تو اس کے نظام تنفس کی بہتری کے لیے یہ مفید ہوتا ہے۔

ڈائٹ آف ٹاؤن کلینک سے تعلق رکھنے والی ماہر غذائیت عبیر ابو راجیلی خاص طور پرخواتین اور عموماً مردوں میں وٹامن ڈی کی کمی کی علامات کے بارے میں مندرجہ ذیل موضوع  میں تفصیل سے آگاہ کریں گی۔

وٹامن ڈی کی کمی کا سب سے زیادہ خطرہ کن لوگوں کو ہوتا ہے؟

کچھ لوگوں کو وٹامن ڈی کی کمی کا زیادہ سامنا کرنا پڑتا ہے جن میں شامل ہیں 65 سال سے زیادہ عمر کے مرد و خواتین، حاملہ عورتیں، بچوں کو دودھ پلانے والی عورتیں، موٹاپے کا شکار افراد، آنتوں میں سوزش والے افراد، سخت جلد والے افراد اور ایسے لوگ جو سورج کی روشنی نہیں لیتے۔

وٹامن ڈی کے ذرائع

سورج کی شعاعوں کے سامنے رہنے سے انسانی جسم وٹامن ڈی خودکار طریقے سے پیدا کرتا ہے۔ سورج کی روشنی میں روزانہ 10-15 منٹ بیٹھنے سے جسم کو وٹامن ڈی ملتا ہے، اس کے علاوہ کھانے کے ذرائع جیسے انڈے کی زردی، پنیر اور سالمن مچھلی وغیرہ  سے بھی اس کی کافی مقدارمہیا ہوتی ہے۔ اس کے علاوہ وٹامن ڈی دودھ سے تیارشدہ اشیاء میں بھی ہوتا ہے۔

روزانہ وٹامن ڈی کی مطلوبہ مقدار

بچوں کو روزانہ 400 IU وٹامن ڈی کی ضرورت ہوتی ہے، اور ایک سال سے 70 سال کی عمر میں انہیں روزانہ 600 IU کی ضرورت ہوتی ہے۔ بزرگ (70 سال یا اس سے زیادہ عمر کےافراد) کو روزانہ 800 IU کی ضرورت ہوتی ہے۔

خواتین میں وٹامن ڈی کی کمی کی علامات

خواتین میں ٹامن ڈی کی کمی کی نمایاں علامات  یہ ہوتی ہیں:

قوت مدافعت کی کمزوری

وٹامن ڈی جسم کی قوت مدافعت کو تیز کرنے، نزلہ زکام اور انفلوئنزا سے بچنے اور بیماری کی مدت کو کم کرنے میں اہم کردار ادا کرتا ہے۔ یہ وٹامن سفید خون کے خلیوں کی سرگرمی کو بڑھاتا ہے جو بیکٹیریا سے لڑتے ہیں۔

اگر آپ آسٹیوپوروسس، دائمی تھکاوٹ، اکتاہٹ، دائمی درد، جوڑوں میں سوزش وغیرہ سے دو چار ہیں تو یہ آپ کے جسم میں وٹامن ڈی کی کمی کی نشاندہی کرتا ہے۔

جسم میں وٹامن ڈی اورموسمی اختلافات، جسم میں انفیکشن کی موجودگی خاص طور پر سانس کے انفیکشن، کے درمیان گہرا تعلق ہے.

دل اور شریانوں کی بیماری

وٹامن ڈی عمر رسیدہ افراد کو قوت فراہم کرنے میں اہم کردار ادا کرتا ہے، اس سے موت کا خطرہ کم ہوتا ہے، خصوصاً دل کی بیماریوں سے بچاتا ہے۔ اگر آپ ہائی بلڈ پریشر، یا دل کی بیماریوں سے دو چار ہیں، یا پہلے دل کا دورہ پڑا ہے تو یہ وٹامن ڈی کی کمی کی نشاندہی کرتا ہے۔

ذہنی دباؤ

کچھ مطالعات میں وٹامن ڈی اور افسردگی کے مابین ایک ربط دکھایا گیا ہے۔ جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ افسردگی کے خطرے کے تناظر میں وٹامن ڈی کی سطح کو بہتر بنانا ضروری ہے۔

Comments are closed.